دُنیا کی حیثیت کیا ہے

دُنیا کی حیثیت کیا ہے

Advertisement

(۱)’’ عَنْ حُذَیْفَۃَ قَالَ قَالَ سَمِعْتُ رَسُوْلَ اﷲِ صَلَّی اللہُ عَلَیْہِ وَسَلَّمَ یَقُوْلُ حُبُّ الدُّنْیَا رَأْسُ کُلِّ خَطِیْئَۃٍ‘‘۔ (1)
حضرت حذیفہ رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُ نے فرمایا کہ میں نے رسولِ کریم علیہ الصلاۃ والسلام کو فرماتے ہوئے سنا کہ دنیا کی محبت ہر بُرائی کی جڑ ہے ۔ (مشکوۃ)
(۲)’’عَن أَبِی مُوسَی قَالَ قَالَ رَسُولُ اللَّہِ صَلَّی اللہُ عَلَیْہِ وَسَلَّمَ مَنْ أَحَبَّ دُنْیَاہُ أَضَرَّ بِآخِرَتِہِ وَمَنْ أَحَبَّ آخِرَتَہُ أَضَرَّ بِدُنْیَاہُ فَآثِرُوا مَا یَبْقَی عَلَی مَا یَفْنی‘‘۔ (2)
حضرت ابوموسیٰ رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُ نے کہا کہ حضور علیہ الصلاۃ والسلام نے فرمایا کہ جو شخص اپنی دُنیا سے محبت کرتا ہے ( ایسی محبت جو اللہ و رسول کی محبت پر غالب ہو) تو وہ اپنی آخرت کو نقصان پہنچاتا ہے اور جو اپنی آخرت سے محبت کرتا ہے وہ اپنی دُنیا کو نقصان پہنچاتا ہے تو ( اے مسلمانو!) فنا ہونے والی چیز( یعنی دُنیا ) کوتج( چھوڑ)کر باقی رہنے والی چیز (یعنی آخرت) کو اختیار کرلو۔ (احمد، مشکوۃ)
(۳)’’عَنْ سَہْلِ بْنِ سَعْدٍ قَالَ قَالَ رَسُولُ اللَّہِ صَلَّی اللہُ عَلَیْہِ وَسَلَّمَ لَوْ کَانَتْ الدُّنْیَا تَعْدِلُ عِنْدَ اللَّہِ جَنَاحَ بَعُوضَۃٍ مَا سَقَی کَافِرًا مِنْہَا شَرْبَۃً‘‘۔ (3) (ترمذی)
حضرت سہل بن سعد رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُ نے فرمایا کہ رسولِ کریم علیہ الصلاۃ والتسلیم نے فرمایا کہ اگر دُنیا خدائے تعالیٰ کی نظر میں مچھر کے پر برابر بھی وقعت رکھتی تو اس میں سے کافر کو ایک گھونٹ بھی نہ پلاتا۔
(۴)’’عَنْ أَبِی ہُرَیْرَۃَ أَنَّ رَسُولَ اللَّہِ صَلَّی اللہُ عَلَیْہِ وَسَلَّمَ قَالَ أَلاَ إِنَّ الدُّنْیَا مَلْعُونَۃٌ
حضرت ابوہریرہ رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُ سے روایت ہے کہ حضور علیہ الصلاۃ والسلام نے فرمایا کہ ( کان کھول کر)

مَلْعُونٌ مَا فِیہَا إِلَّا ذِکْرُ اللَّہِ وَمَا وَالاہُ وَعَالِمٌ أَوْ مُتَعَلِّمٌ‘‘۔ (1) (ترمذی)
سُن لو دنیا ملعون ہے اورجو چیزیں اس میں ہیں وہ بھی معلون ہیں۔ مگر ذکرِ الہٰی اور وہ وہ چیزیں جنہیں رب تعالیٰ محبوب رکھتا ہے اور عالم یا متعلم بھی۔ (ترمذی)
(۵)’’عَنْ أَبِی ہُرَیْرَۃَ قَالَ قَالَ رَسُولُ اللَّہِ صَلَّی اللہُ عَلَیْہِ وَسَلَّمَ الدُّنْیَا سِجْنُ الْمُؤْمِنِ وَجَنَّۃُ الْکَافِرِ‘‘(2) ۔
حضرت ابوہریرہ رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُ نے کہا کہ رسولِ کریم عَلَیْہِ الصَّلَاۃُ وَ التَّسْلِیْم نے فرمایا کہ دُنیا مومن کا قید خانہ ہے اور کافر کی جنت ہے ۔ (مسلم شریف)
٭…٭…٭…٭

________________________________
1 – ’’سنن الترمذی‘‘، کتاب الزھد عن رسول اللہ، الحدیث: ۲۳۲۹، ج۴، ص۱۴۴.
2 – ’’صحیح مسلم‘‘، کتاب الزھد والرقاق، الحدیث: ۱۔ (۲۹۵۶) ص۱۵۸۲.

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

error: Content is protected !!