Our website is made possible by displaying online advertisements to our visitors. Please consider supporting us by whitelisting our website.

بہترین آدمی وہ ہے جس کے شرسے لوگ محفوظ رہیں

بہترین آدمی وہ ہے جس کے شرسے لوگ محفوظ رہیں

رسولِ نذیر ، سِراجِ مُنیر، محبوبِ ربِّ قدیرصلَّی اللّٰہ تعالٰی علیہ واٰلہٖ وسلَّم نے ارشاد فرمایا : خِیَارُکُمْ مَن یُّؤْمَنُ شَرُّہُ، وَیُرْجٰی خَیْرُہ یعنی : تم سب میں بہترین آدمی وہ ہے جس کے شر سے محفوظ رہا جائے اوراس سے بھلائی کی امید رکھی جائے ۔(شعب الایمان، باب اَن یحب المسلم لاخیہ۔۔۔الخ، ۷/ ۵۳۹حدیث:۱۱۲۶۷)
حضرتِ علامہ عبد الرء ُوف مناوی علیہ رحمۃ اللّٰہ الہادی اس حدیث ِپاک کی شرح میں فرماتے ہیں : جو شخص بھلائی کے کام کرتا ہو یہاں تک کہ لوگوں میں اسی حوالہ سے جاناجاتا ہو اسی شخص سے بھلائی کی امید رکھی جاتی ہے ، جس کی بھلائیاں زیادہ
ہوں تودل اس کے شر سے محفوظ ہوتے ہیں ، جب آدمی کے دل میں ایمان مضبوط ہوتا ہے تو اس سے بھلائی کی امیدرکھی جاتی ہے اور لوگ اس کی برائی سے محفوظ ہوتے ہیں ، جب ایمان کمزور ہوتا ہے تو بھلائی کم ہوجاتی اور برائی غالب ہو جاتی ہے ۔(فیض القدیر، ۳/ ۶۶۶تحت الحدیث:۴۱۱۳)

error: Content is protected !!