Our website is made possible by displaying online advertisements to our visitors. Please consider supporting us by whitelisting our website.

تیرے گھرسے دنیاپلی غوث اعظم

تیرے گھرسے دنیاپلی غوث اعظم

رحمۃاللہ تعالٰی علیہ
کھلا میرے دل کی کلی غوث اعظم
۔
مٹا قلب کی بے کلی غوث اعظم
۔
۔ مرے چاند میں صدقے آجا ادھر بھی
۔ چمک اٹھے دل کی گلی غوث اعظم
ترے رب نے مالک کیا تیرے جد کو ۔
تیرے گھر سے دنیا پلی غوث اعظم ۔
۔ وہ ہے کون ایسا نہیں جس نے پایا
۔ ترے در پہ دنیا ڈھلی غوث اعظم
کہا جس نے یا غوث اَغِثْنِیْ تو دم میں ۔
ہر آئی مصیبت ٹلی غوث اعظم ۔
۔ نہیں کوئی بھی ایسا فریادی آقا
۔ خبر جس کی تم نے نہ لی غوث اعظم
مری روزی مجھ کو عطا کر دے آقا ۔
ترے در سے دنیا نے لی غوث اعظم ۔
۔ نہ مانگوں میں تم سے تو پھر کس سے مانگوں
۔ کہیں اور بھی ہے چلی غوث اعظم
صدا گر یہاں میں نہ دوں تو کہاں دوں ۔
کوئی اور بھی ہے گلی غوث اعظم ۔
۔ جو ڈوبی تھی کشتی وہ دم میں نکالی
۔ تجھے ایسی قدرت ملی غوث اعظم
ہمارا بھی بیڑا لگا دے کنارے ۔
تمہیں ناخدائی ملی غوث اعظم ۔
۔ جو قسمت ہو میری بُری اچھی کر دے
۔ جو عادت ہو بد کر بھلی غوث اعظم
فدا تم پہ ہو جائے نوریٔ مضطر ۔
یہ ہے اس کی خواہش دلی غوث اعظم ۔
                                 (سامان بخشش،صفحہ۱۰۷)
error: Content is protected !!