Our website is made possible by displaying online advertisements to our visitors. Please consider supporting us by whitelisting our website.

اگر نشے یا نیند میں طلاق دی تو واقع ہوجائے گی یا نہیں ؟

 سوال نمبر ۱۲:-اگر نشے یا نیند میں طلاق دی تو واقع ہوجائے گی یا نہیں ؟

جواب :-اگر کسی نے نشہ پی کر طلاق دی تو ہوجائے گی ۔نشہ خواہ شراب پینے سے ہویا بھنگ یا افیون یا چرس یا کسی اور چیز سے ۔ بہر صورت طلاق ہوجائے گی ۔ البتہ اگر کسی نے اُسے مجبور کرکے یعنی قتل یا عضو کاٹ دینے کی دھمکی یا دھوکے سے نشہ پلا دیا یا حالت اضطرار میں مثلاً پیاس سے مررہا تھا اور کوئی حلال شے پینے کو نہ تھی تو ایسی حالت میں شراب وغیرہ نشہ کی چیز پی اور اس کے نشے میں طلاق دی تو واقع نہ ہوگی اورنیند میں دی جانے والی طلاق بھی واقع نہ ہوگی ۔

error: Content is protected !!