Our website is made possible by displaying online advertisements to our visitors. Please consider supporting us by whitelisting our website.

موزوں اور پٹی پر مسح کرنا

موزوں اور پٹی پر مسح کرنا

 

(1): اَلمسحُ علی الخُفین
مسح: غَسل(دھونے ) کا عوض ہے۔
خفین: وہ موزے جو عموماً چمڑے کے بنے ہوں اور ٹخنوں تک کو ڈھانپ لیں۔
(2): موزوں پر مسح کرنے کا حکم
مردوں اور عورتوں کے لئے سفرو حضر میں اِس اُمت کی آسانی اور تخفیف کے لئے اِجازت ہے۔
(3): موزوں پر مسح کرنے کی شرائط
(۱): دونوں موزے پاک ہوں۔
(۲): دونوں موزے ٹخنے تک ڈھانپنے والے ہوں۔
(۳): اَلبتہ اگرپاؤں کی چھوٹی تین انگلیوں سے کم مقدار پھٹن ہو تو کوئی حرج نہیں ۔
(۴): دونوں موزے پائو ںپر باندھے بغیر ٹھہرے رہیں یعنی وہ چلتے وقت قدموں سے نہ اُتریں۔
(۵): دونوں موزے پائوں کے اندر پانی داخل ہونے سے روکنے والے ہوں۔
(۶): دونوں موزوں کو پہن کر تقریباً دو کلومیٹر یا نصف گھنٹہ تک چلنا ممکن ہو۔
(۷): دونوں موزے پاکیزگی پر پہنے ہوں ۔
مسئلہ : ہمارے زمانے میں اِستعمال ہونے والی جرابوں پر مسح کرنا جائز نہیں ہے کیونکہ اِن کی وجہ سے پانی پائوں کے اندر داخل ہوجاتا ہے۔

 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

error: Content is protected !!