قرضدارکو مہلت دینا

قرضدارکو مہلت دینا

Advertisement

(۱)’’عَنْ أَبِیْ قَتَادَۃَ قَالَ سَمِعْتُ رَسُولَ اللَّہِ صَلَّی اللہُ عَلَیْہِ وَسَلَّمَ یَقُوْلُ مَنْ أَنْظَرَمُعْسِرًا أَوْ وَضَعَ عَنْہُ أَنْجَاہُ اللَّہُ مِنْ کُرَبِ یَوْمِ الْقِیَامَۃِ‘‘۔ (1)
حضرت ابوقتادہ رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُ نے کہا کہ میں نے رسولِ کریم عَلَیْہِ الصَّلَاۃُ وَ التَّسْلِیْم کو فرماتے ہوئے سنا کہ جو شخص قرضدار کو مہلت دے یا قرض معاف کردے تو اللہ تعالیٰ اس کو قیامت کے دن کی سختیوں سے محفوظ رکھے گا۔ (مسلم شریف)
(۲)’’عَنْ عِمْرَانَ بْنِ حُصَیْنٍ قَالَ قَالَ رَسُولُ اللَّہِ صَلَّی اللہُ عَلَیْہِ وَسَلَّمَ مَنْ کَانَ لَہُ عَلَی رَجُلٍ حَقٌّ فَمَنْ أَخَّرَہُ کَانَ لَہُ بِکُلِّ یَوْمٍ صَدَقَۃٌ‘‘۔ (2)
حضرت عمران بن حصین رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُ نے کہا کہ حضور عَلَیْہِ الصَّلَاۃُ وَالسَّلَام نے فرمایا کہ جس کا کسی شخص پر کوئی حق ہو وہ اسے مہلت دے تو اسے ہر دن کے عوض صدقہ کا ثواب ملے گا۔ (احمد، مشکوۃ)
(۳)’’ عَنْ أَبِی ہُرَیْرَۃَ قَالَ قَالَ رَسُولُ اللَّہِ صَلَّی اللہُ عَلَیْہِ وَسَلَّمَ نَفْسُ الْمُؤْمِنِ مُعَلَّقَۃٌ بِدَیْنِہِ حَتَّی یُقْضَی عَنْہُ‘‘۔ (3)
حضرت ابوہریرہ رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُ نے کہا کہ رسولِ کریم عَلَیْہِ الصَّلَاۃُ وَ التَّسْلِیْم نے فرمایا کہ مومن کی جان اپنے قرض کے سبب معلق رہتی ہے جب تک کہ اس کا قرض ادا نہ کردیا جائے ۔
(۴)’’ عَنْ عَبْدِ اللَّہِ بْنِ عَمْرِو أَنَّ رَسُولَ اللَّہِ
حضرت عبداﷲ بن عمرو رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُ سے مروی

صَلَّی اللہُ عَلَیْہِ وَسَلَّمَ قَالَ یُغْفَرُ لِلشَّہِیدِ کُلُّ ذَنْبٍ إِلَّا الدَّیْنَ‘‘۔ (1)
ہے کہ حضور عَلَیْہِ الصَّلَاۃُ وَالسَّلَام نے فرمایا کہ شہید کے سب گناہ بخش دیئے جاتے ہیں سوائے قرض کے ۔ (مسلم شریف)
٭…٭…٭…٭

________________________________
1 – ’’ صحیح مسلم‘‘ ، کتاب الامارۃ، باب من قتل فی سبیل اللہ کفرت إلخ، الحدیث: ۱۱۹۔ (۱۸۸۶) ص۱۰۴۶.

Advertisement

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

error: Content is protected !!