صَحابیات اور عِشْقِ رَسول

حکمِ محبوب پر عمل

حضرت سَیِّدُنا اِمام احمد بن محمد قَسْطَلانی قُدِّسَ  سِرُّہُ النّوْرَانِی اَلْـمَوَاھِبُ اللَّدُنِّـیَّه میں فرماتے ہیں کہ سرکارِ مدینہ صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم کا قُرب بخشنے والے اُمُور کو نفسانی خواہشات پر مبنی اُمُور پر ترجیح دی جائے۔یعنی جس… Read More

جان و مال کی قربانی

عِشْقِ مصطفےٰ میں جان و مال کی قربانی پیش کرنا پڑے تو قطعی طور پر دریغ نہ کیا جائے بلکہ ہر اس واسطے و ذریعے کو خَتْم کر دیا جائے جو حُصُولِ رَضا  و قُرْبِ مصطفےٰ سے مانِع ہو 3… Read More

قُرْبِ محبوب کی کوشش

مَحبَّتِ مصطفےٰ کے باعِث ہر شے سے ناطہ توڑ کر اس طرح سرکار صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم کا بن جائیے کہ ان کے سِوا کہیں سُکُون ملے نہ چین، بلکہ بارگاہِ حبیب میں ہی دِل کو اِطمینان حاصِل… Read More

تیسری علامت: اتباع شریعت

آپ صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمکی پَیروی کرے اور آپ صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمکی سنّتوں کا عامِل ہو، آپ کے اَفعال و اَقوال کا اِتِّبَاع کرے، آپ کے حکْم کو بجا  لائے اور نَوَاہی سے اِجْتِنَابکرے اور ہر… Read More

دوسری علامت: شوقِ ملاقات

دیدارِ سرکار کا بَہُت زیادہ شوق ہو، کیونکہ ہر مُحِب اپنے مَحْبُوب سے مُلاقات کا شوق رکھتا ہے اور بعض مشائخ کا تو یہ بھی کہنا ہے کہ مَحبَّت مَحْبُوب کے شوق کا ہی دوسرا نام ہے۔2چنانچہ،  فراقِ نبی میں… Read More

کثرتِ ذکر

آپ صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم کا ذِکْر اس کَثْرَت و لذّت سے کیا جائے کہ آپ کے سِوا دِل میں کسی کی مَحبَّت باقی رہے نہ کسی کی یاد سے لُطْف آئے۔2  بلکہ ذِکْرِ مَحْبُوب کے وَقْت اَلفاظ… Read More

قبرِ انور کی زیارت

صَدْرُ الشَّریعہ، بدرُ الطَّریقہ حضرتِ علّامہ مولانا مفتی محمد امجد علی اعظمی عَلَیْہِ رَحمَۃُ اللّٰہِالْقَوِی بہارِ شَریعَت میں فرماتے ہیں کہ زیارتِ اَقْدَس قریب بواجِب ہے۔2جبکہ شیخ الحدیث حضرت عَلّامہ عبد المصطفےٰ اعظمی عَلَیْہِ رَحمَۃُ اللّٰہِالْقَوِی سیرتِ مصطفےٰ میں فرماتے… Read More

دُرود شریف

اللہعَزَّ  وَجَلَّنے ہمیں اپنے حبیب صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمپر دُرُود ِ پاک پڑھنے کا حکْم  دیتے ہوئے اِرشَاد فرمایا: اِنَّ اللہَ وَمَلٰٓئِکَتَہٗ یُصَلُّوۡنَ عَلَی: ترجمۂ کنز الایمان:بے شک اللہ اور اس کے النَّبِیِّ ؕ یٰۤاَیُّہَا الَّذِیۡنَ اٰمَنُوۡا صَلُّوۡا… Read More

مَدحِ رسول

مَحْبُوبِ ربِّ داور، شفیعِ روزِ مَحشر صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم کا ہر اُمتی پر یہ بھی حَق ہے کہ وہ آپ صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم کی مَدْح و ثَنا کا ہمیشہ اِعلان اور چَرْچَا کرتا رہے… Read More

بارگاہِ نبوت کی بے ادبی قطعاً گوارا نہ تھی

اسی طرح حضرت سَیِّدُنا عبدُ الرحمٰن بن عامِری رَضِیَ اللّٰہُ تَعَالٰی عَنْہ اپنی قوم کے شُیوخ سے رِوایَت کرتے ہیں کہ ایک مرتبہ ہم بازارِ عُکاظ   میں تھے کہ سرورِ دو۲عالَم صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم ہمارے پاس تشریف… Read More