ماں باپ کی خدمت

  حضور اکرم صلي اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہٖ وسلّم نے ارشاد فرمایا کہ میں جنت میں داخل ہوا تو میں نے سنا کہ وہاں کوئی شخص قرآن مجید کی قرأ ت کررہا ہے جب میں نے دریافت کیا کہ قرأت کرنے والا کون ہے؟ تو فرشتوں نے بتایا کہ آپ کے صحابی حارثہ بن نعمان رضی اﷲ تعالیٰ عنہ ہیں حضورصلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہٖ وسلّم نے فرمایا کہ اے میرے صحابیو! دیکھ لو یہ ہے نیکو کاری اور ایسا ہوتا ہے اچھے سلوک کا بدلہ حضرت حارثہ بن نعمان رضی اﷲ تعالی عنہ سب لوگوں سے زیادہ بہترین سلوک اپنی ماں کے ساتھ کرتے تھے۔
(شرح السنۃ،کتاب البر والصلۃ،باب بر الوالدین،رقم ۳۳۱۲۔۳۳۱۳،ج۶،ص۴۲۶)
  اور دوسری حدیث میں ہے کہ خدا کی خوشی باپ کی خوشی میں اور خدا کی ناراضگی باپ کی ناراضگی میں ہے۔
(السنن الترمذی،کتاب البر والصلۃ،باب ماجاء من الفضل فی رضا الوالدین،رقم ۱۹۰۷،ج۳،ص۳۶۰)